راز

ہر کس نہ شناسندۂِ راز است وگرنہ —
ایں ہا ہمہ رازست کہ معلومِ عوام است

– عرفیؔ شیرازی

ایک تبصرہ: “راز”

تبصرہ کیجیے