بے قراری

آج کل بے قرار ہیں ہم بھی
بیٹھ جا، چلنے ہار ہیں ہم بھی !

– میر تقی میرؔ

تبصرہ کیجیے