پامال

سر اٹھاتے ہی ہو گئے پامال
سبزہ ءِ نو دمیدہ کے مانند !
– میرؔ

تبصرہ کیجیے